AhnafMedia

مغرب کی نماز کتنی دیر تک پڑھی جا سکتی ہے

Rate this item
(24 votes)

 

 

 

Question:

Main ye poochna chahta hun ki Maghrib ki azan ke bad Namaz ke ada karne mein kitni der jayez hai, aksar masajid waghairah mein Azan ke foran bad Jamat ho jati hai lekin hamare ek ahbab hain jo kahte hain ki Maghrib ka waqt rehta hai lihaza namaz ho jayegi. 

Mujhe sirf itna bata dijiye ki Azan ke bad kitni der tak waqt rehta hai..?
Aur afzal tareeka kya hai azan ke foran bad ya kuch takheer se...?

Muhammad Raghib Khan

From Kanpur, Uttar Pradesh, INDIA

سوال:

مجھے یہ دریافت کرنا ہے کہ مغرب کی اذان کے بعد نماز کا وقت کتنی دیر تک رہتا ہے؟ نیز یہ بھی بتا دیں کہ مغرب کی نماز کو اذان کے فوراً بعد ادا کرنا افضل  ہے یا تاخیر سے؟ محمد راغب خان } کانپور اتّر پردیش ،انڈیا{

جواب:

سورج غروب ہونے کے بعد آسمان کے مغربی کنارے پر جو سفیدی رہتی ہے اس کو "شفق" کہتے ہیں،  جب تک آسمان کے کناروں میں "شفق" کی سفیدی قائم رہتی ہے تب تک مغرب کا وقت باقی رہتا ہے۔ اس کا دورانیہ تقریباً ایک گھنٹہ یا اس سے کچھ کم و پیش ہوتا ہے۔ مغرب کی نماز میں بلاوجہ قصداً تاخیر کرنا مکروہ ہے، اس لیے غروبِ آفتاب کے بعد تاخیر کیے بغیر مغرب کی نماز ادا کرنا افضل و مستحب ہے۔ تاہم اگر کسی مجبوری کی وجہ سے تاخیر ہو جائے تو "شفق" کے ختم ہونے سے پہلے پہلے ضرور پڑھ لی جائےکیوں کہ  "شفق" غروب ہونے بعد مغرب کی نماز قضاء ہو جائے گی اور قصداً کسی نمازکو  قضاء کرنا بہت بڑا گناہ ہے۔ واللہ اعلم بالصّواب

دارالافتاء مرکز اہل السنّت والجماعت ، سرگودھا

27 ذیقعدہ 1435 ھ ، 23ستمبر 2014  ء

 

Read 2429 times

DARULIFTA

Visit: DARUL IFTA

Islahun Nisa

Visit: Islahun Nisa

Latest Items

Contact us

Markaz Ahlus Sunnah Wal Jama'h, 87 SB, Lahore Road, Sargodha.

  • Cell: +(92) 
You are here: Home Question & Answers عبادات - Worship مغرب کی نماز کتنی دیر تک پڑھی جا سکتی ہے

By: Cogent Devs - A Design & Development Company